Iztirab

Iztirab

فروغ فرخ زاد کے لیے ایک نظم

مصاحب شاہ سے کہو کہ 
فقیہہ اعظم بھی آج تصدیق کر گئے ہیں 
کہ فصل پھر سے گناہ گاروں کی پک گئی ہے 
حضور کی جنبش نظر کے 
تمام جلاد منتظر ہیں 
کہ کون سی حد جناب جاری کریں 
تو تعمیل بندگی ہو 
کہاں پہ سر اور کہاں پہ دستار اتارنا احسن العمل ہے 
کہاں پہ ہاتھوں کہاں زبانوں کو قطع کیجئے 
کہاں پہ دروازہ رزق کا بند کرنا ہوگا 
کہاں پہ آسائشوں کی بھوکوں کو مار دیجے 
کہاں بٹے گی لعان کی چھوٹ 
اور کہاں پر 
رجم کے احکام جاری ہوں گے 
کہاں پہ نو سالہ بچیاں چہل سالہ مردوں کے ساتھ 
سنگین میں پرونے کا حکم ہوگا 
کہاں پہ اقبالی ملزموں کو 
کسی طرح شک کا فائدہ ہو 
کہاں پہ معصوم دار پر کھینچنا پڑے گا 
حضور احکام جو بھی جاری کریں گے 
فقط التجا یہ ہوگی 
کہ اپنے ارشاد عالیہ کو 
زبانی رکھیں 
وگرنہ 
.قانونی الجھنیں ہیں

پروین شاکر

Leave a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *